افغانستان: طالبان کے قبضے کے بعد ملک میں پہلی پولیو ویکسی نیشن مہم شروع

https://urdu.indianarrative.com/First-polio-vaccination-Afghan.webp

افغانستان: طالبان کے قبضے کے بعد ملک میں پہلی پولیو ویکسی نیشن مہم شروع

افغانستان میں طالبان کے قبضے کے بعد پہلی پولیو ویکسی نیشن مہم 8 نومبر سے شروع کی جائے گی۔ یہ معلومات یونیسیف نے پیر کو دی۔عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے طالبان کے اس فیصلے کا خیر مقدم کیا ہے۔ نیز، ڈبلیو ایچ او نے ملک بھر میں گھر گھر پولیو مہم دوبارہ شروع کرنے کی حمایت کی ہے۔ یہ تین سالوں میں افغانستان کے تمام بچوں تک پہنچنے والی پہلی مہم ہوگی، جس میں ملک بھر میں 3.3 ملین سے زائد بچے شامل ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ دوسری ملک گیر پولیو ویکسی نیشن مہم پر بھی اتفاق کیا گیا ہے اور اسے دسمبر میں پاکستان کی اپنی پولیو مہم کے ساتھ ہم آہنگ کیا جائے گا۔

افغانستان میں عالمی ادارہ صحت کے نمائندے ڈیپینگ لوو نے کہا کہ یہ صحیح سمت میں ایک اہم قدم ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم جانتے ہیں کہ پولیو ویکسین کی متعدد خوراکیں بہترین تحفظ فراہم کرتی ہیں، لہذا ہمیں یہ دیکھ کر خوشی ہوئی کہ اس سال کے اختتام سے قبل ایک اور مہم کا منصوبہ بنایا گیا ہے۔ پولیو کے خاتمے کے لیے تمام بچوں تک مسلسل رسائی ضروری ہے۔ یہ اولین ترجیح ہونی چاہیے۔

افغانستان میں یونیسیف کے نمائندے ہیرو لوڈوچ ڈی لیس نے کہا کہ یہ فیصلہ ہمیں پولیو کے خاتمے کی کوششوں میں ایک بڑا قدم آگے بڑھانے کی اجازت دے گا۔ پولیو کا مکمل خاتمہ، ہر گھر میں افغان بچوں کو ویکسین لگائی جائے۔ ہم اپنے شراکت داروں کے ساتھ یہی کرنے جا رہے ہیں۔